Connect with us

کرک

سائبر سیکیورٹی کو یقینی بنانا ہوگا۔ ڈاکٹر زبیر

خوشحال خان خٹک یونیورسٹی کرک نے (پاکستان سائبر سیکیورٹی کی قانونی پہلوؤں) کے اہم موضوع پر ایک روزہ سیمینار کا انعقاد کیا۔ منگل کے روز ہونے والے سیمینار کا اہتمام یونیورسٹی کی مذہبی اور کردار سازی سوسائٹی نے کیا تھا۔ اس کا مقصد پاکستان میں سائبر سیکیورٹی سے متعلق قانونی فریم ورک کے بارے میں بیداری پیدا کرنا تھا۔

 ڈاکٹر محمد زبیر جو خوشحال خان خٹک یونیورسٹی کرک میں آفس آف انوویشن اینڈ کمرشلائزیشن کے ڈائریکٹر ہیں نے آج کی دنیا خصوصاً پاکستان میں سائبر سیکیورٹی کے قانونی پہلوؤں کو سمجھنے کی اہمیت پر لیکچر دیا۔ اور مختلف قوانین اور ایکٹس پر روشنی ڈالی ـ

اپنے خطاب میں ڈاکٹر زبیر نے عالمی منظر نامے میں سائبر سیکیورٹی کی اہمیت پر زور دیا۔ انہوں نے سائبر سیکیورٹی کو ملک کے روایتی حفاظتی اقدامات کی طرح اہم قرار دیا۔ انہوں نے سائبرسیکیوریٹی کے مضبوط طریقوں کی ضرورت پر زور دیا، ان ممالک سے مثالیں دیں جو سائبر سیکیورٹی کے سخت اقدامات کے لیے مشہور ہیں۔

 ڈاکٹر زبیر نے پاکستان میں سائبر سیکیورٹی کو کنٹرول کرنے والے قانونی فریم ورک کی وضاحت کی، موجودہ ضوابط اور ان کے اثرات پر روشنی ڈالی۔ انہوں نے ڈیجیٹل اثاثوں کی حفاظت اور ان ضوابط پر عمل درآمد کرنے کی ضرورت پر زور دیا ـ

سیمینار میں فیکلٹی، ڈپٹی پرووسٹ، انتظامی افسران اور طلباء نے شرکت کی اور ملکی سائبر سیکیورٹی کے قوانین کے بارے میں تبادلہ خیال کیا۔

Continue Reading
Click to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *